Previous Next

Action Against illegal Medical Labs..

[پشاور۔ضلعی انتظامیہ کی ہیلتھ کےئر کمیشن کے ساتھ مشترکہ کاروائی ۔15 میڈیکل لیبارٹیریاں سیل۔]
 [ضلعی انتظامیہ نے ہیلتھ کےئر کمیشن کے ساتھ مشترکہ کاروائی کر تے ہوئے ناصر باغ روڈ اور حیات آباد میں مختلف لیبارٹریوں کی چیکنگ کر تے ہوئے نان کوالیفائید سٹاف کی موجودگی ،بغیر رجسٹریشن کے لیبارٹریوں کو چلانے اور ایکسپائر کٹ کی موجودگی پر 15 لیبارٹریوں کو سیل کر دیا ۔]
 قا ئمقام ڈپٹی کمشنر پشاورشاہد محمود کی ہدایت پر ڈائریکٹر ہیلتھ کےئر کمیشن ڈاکٹر خالد مسعود، ایڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر عمران خان، چیف انسپکٹرز فیصل خان ، سلیمان جلال، اسد خان، انسپکٹر زمرزا شفقت،سجاد علی شاہ و دیگر نے مشترکہ کاروائی کر تے ہوئے ناصر باغ روڈ اور حیات آباد میں 60 سے زیادہ میڈیکل لیبارٹریوں کی چیکنگ کی۔ کاروائی کے دوران لیبارٹریوں کی رجسٹریشن اور سٹاف کی تعلیمی اسناد کو چیک کیا گیا۔ جن میں سے 15 لیبارٹریوں کو بغیر رجسٹریشن کے چلانے، نان کوالیفائیڈ سٹاف اور ایکسپا ئر کٹ کی موجودگی پر سیل کر دیا گیا۔ جبکہ بیشتر لیبارٹریوں کو نوٹس دیے گئے۔ اس موقع پر بات کر تے ہوئے ڈائریکٹر ہیلتھ کےئر کمیشن ڈاکٹر خالد مسعود اور ا یڈیشنل اسسٹنٹ کمشنر عمران خان نے کہا کہ ان لیبارٹریوں کو یکم دسمبر کو نوٹس دیے گئے تھے اور ان نوٹس کی ڈیڈ لائن 15 جنوری تھی جس کے ختم ہونے پر آج کی کاروائی عمل میں لائی گئی۔ انھوں نے کہا کہ سیل شدہ لیبارٹریوں کے مالکان کے خلاف قانون کے مطابق سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔

Tags